لندن(نیوز ڈیسک)اڑتے ہوئے ہوائی جہاز سے گرنے والے موبائل فون کا صحیح سلامت بچ جانا ممکن ہے؟ جی ہاں، نہ صرف ممکن ہے بلکہ یہ بھی ممکن ہے کہ گرتا ہوا فون ایک بہت ہی دلچسپ ویڈیو ریکارڈ کر لے اور پھر یہ ویڈیو فون کے مالک، اور اس کے ذریعے انٹرنیٹ صارفین تک بھی پہنچ جائے۔ دراصل یہ بظاہر ناممکن داستان اس وقت رقم ہوئی جب ایک صاحب اڑتے ہوئے ہوائی جہازسے باہر کے مناظر کی ریکارڈنگ کر رہے تھے کہ موبائل فون نیچے گر گیا۔
ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق رابرٹ ریان نامی نوجوان نے جہاز سے گرنے والے فون میں ریکارڈ ہونے والی ویڈیو ویب سائٹ یوٹیوب پر اپ لوڈ کی ہے۔ ریان کا کہنا ہے کہ ان کے انکل بلیک ہینڈرسن ایک چھوٹے طیارے میں سفر کے دوران کھڑکی سے باہر کے مناظر کی ریکارڈنگ کررہے تھے کہ موبائل فون ان کے ہاتھ سے گرگیا۔ وہ اس وقت تقریباً 1000 فٹ کی بلندی پر پرواز کررہے تھے۔ فون ان کے ہاتھ سے گرا تو سیدھا ایک گھر کے لان میں جاگرا جہاں ایک صاحب پودوں کی کانٹ چھانٹ کر رہے تھے۔

موبائل فون نے ہوائی جہاز سے زمین تک کا فیصلہ تقریباً 17 سیکنڈ میں طے کیا اور اس دوران اس کا ویڈیو کیمرہ چلتا رہا۔ یوٹیوب پر پوسٹ کی گئی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ کس طرح موبائل فون کے گرنے کے دوران نیچے زمین گھومتی ہوئی نظر آرہی ہے اور بالآخر یہ لان میں جا گرتا ہے۔
اتنی بلندی سے گرنے کے باوجود یہ موبائل فون محفوظ تھا اور ریکارڈنگ بھی کر رہا تھا۔ باغیچے کی کانٹ چھانٹ کرتا ہوا شخص موبائل فون کے پاس آتا ہے اور اسے اٹھا کر پاس ہی موجود دوسرے شخص کو مخاطب کرتے ہوئے کہتا ہے ”تمہارا فون یہاں گرا پڑا ہے۔ یہ یہاں کیسے گرگیا؟“ لیکن دوسرا شخص جواب دیتا ہے ”یہ میرا فون نہیں ہے۔ میرا فون تو میری جیب میں ہے۔ ارے یہ تو ریکارڈنگ بھی کررہا ہے۔“ اس پر پہلا شخص بھی حیران رہ جاتا ہے اور کہتا ہے ”یہ تو بڑی حیرت کی بات ہے۔ ہم یہاں پر کام کررہے تھے تو ایسے میں یہ فون کہاں سے آگیا۔“ اس کے بعد وہ شخص ریکارڈنگ بند کر دیتا ہے۔ یوٹیوب پر پوسٹ کئے جانے کے بعد یہ دلچسپ ویڈیو 2 لاکھ سے زائد مرتبہ دیکھی جا چکی ہے۔