لندن (نیوز ڈیسک) بس میں سو جانے والے مسافر کا سٹاپ نکل جانے کے متعلق تو آپ نے سنا ہو گا لیکن شاید کبھی یہ نہیں سنا ہو گا کہ ہوائی جہاز میں سو جانے والا مسافر اپنی اصل منزل کی بجائے کسی دوسرے ملک جا پہنچا۔ یہ حیرتناک کارنامہ ایک امریکی ائرلائن نے سر انجام دے ڈالا ہے، جس نے جرمنی سے برطانیہ کے لئے روانہ ہونے والے مسافر کو امریکا پہنچا دیا۔ بیچارہ مسافر امریکی شہر لاس ویگاس میں اترا تو اپنی آنکھوں پر یقین نہ کر پایا، حالانکہ ائیرلائن سٹاف نے اس کا بورڈنگ پاس تین دفعہ چیک کیا تھا۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق بزنس مین سیموئل جانکوسکی جرمنی سے روانہ ہوئے تھے اور انہیں برطانیہ میں سٹین سٹیڈ ائیرپورٹ پر اترنا تھا۔ سیموئل کا کہنا تھا کہ وہ راستے میں سو گئے اور جب نیند سے بیدار ہوئے تو پتہ چلا کہ برطانیہ بہت پیچھے رہ گیا تھا۔ وہ ساڑھے آٹھ ہزار میل کی دوری پر امریکا پہنچ گئے تھے

یہ عجیب و غریب کارنامہ ’یوروونگز ائیرلائن‘ نے سرانجام دیا جو اس مسافر کو برطانیہ کے سٹینڈ سٹیڈ ائیرپورٹ کی بجائے 8500 میل دور لاس ویگاس ائیرپورٹ لے گئی۔ بیچارے سیموئیل کو معلوم نہیں تھا کہ ابھی ایک اور مصیبت اس کی منتظر تھی۔ امریکی ویزہ نہ ہونے پر امیگریشن حکام اس کے ساتھ مجرموں جیسا سلوک کررہے تھے اور اسے حراست میں لینے کی دھمکی دے رہے تھے۔ بالآخر انہیں امریکہ سے ایک بار پھر جرمنی بھیجا گیا اور وہاں سے وہ ایک اور پرواز کے ذریعے برطانیہ پہنچنے میں کامیاب ہوئے۔